Category: Zauq e sukhan urdu shayari

  • Dil kar raha bakwas karoun URDU SHAYARI

    دل کرر ہا بکواس کروں۔۔کوئی بات نہ خاص ہو۔۔کروں الٹی سیدھی باتیں میں۔۔وقت کے ذیاں کا نہ احساس ہو۔۔بے معنی فضول الفاظ لکھوں۔۔بس میری کچھ بھڑاس ہو۔۔خالی ہو جائے دل کسی طرح۔۔مجھے بھی کہنا آج راس ہو۔۔مجھ سے بھی پوچھیں لوگ کیا ہوا۔۔کیوں تم آج اتنی اداس ہو۔۔میں تھک جائوں کہہ سن کر سبھی۔۔خاموشی پھر…

  • Main nay khuda say kaha

    میں نے خدا سے کہا سب کے اصل چہرے مجھے دکھا دے۔اس نے دکھا دیئے۔۔ اب مجھے سب سے نفرت ہوگئ ہے۔۔۔ پھر میں نے آئینہ بھی دیکھ لیا۔۔ اب مجھے سب سے کوئی گلہ نہیں رہا۔۔ مگر میری نفرت کم نہیں ہوئی ہے۔۔ جب آئینہ دیکھتا ہوں۔۔ یہ نفرت بڑھتی ہے۔۔ کیونکہ میں ایسا…

  • Pathar say Insan urdu udaas shayari

    پتھر سے انسان۔۔۔کبھی چلتے چلتےپتھر سے ٹھوکر کھائی؟کیا کیا پھر؟جس پتھر سے ٹھوکر کھائی اس سے نفرت کی؟اس سے دور ہوئے؟اسے ٹھوکر لگادی؟یا سنبھل کر آگے بڑھ لیئے؟میں بتائوں میں نے کیا کیا؟پتھر اٹھایا۔۔ دل سے لگایا۔۔اب بھی پاس ہے میرے۔۔ یاد دہانی کیلئے۔۔ راستے میں پتھر ہوتے ہیں۔۔پتھروں سے بچ کر چلنا چاہیئے۔۔ اور…

  • Zehar lagtay hain mujhay hunstay chehre

    زہر لگتے ہیں مجھے ہنستے چہرے۔۔ بس چلے تو ان پر میں لگا دوں پہرے۔۔کس بات کی خوشی ہے انکو؟ زندگی کیسی ملی ہے انکو؟جو گزرے سب دکھ سب بھول گئے؟ماضی پر کیسی ڈال یہ دھول گئے؟ایسابھی کیا ملا ہے اب ہمیں بتائوکیا کبھی نہ تم سےکچھ چھنا؟ ہمیں بتائومسکراتے ہوئے دیکھے ہیں ہم نے…

  • تنہائی کو دل میں اتار رہا ہے

    نہ مجھے کسی کا انتظار رہا ہے ابنہ مجھے مرا ماضی پکار رہا ہے اب جستجو میں لگا رہاتھا ایک عمرجس کے وہی لمحہ یہ دل پھیکا سا گزار رہا ہے اباب تو کوئی حسرت کوئی خواہش ہی باقی نہیں رہی میری دل قابو میں مرے اب آرہا تو وقت اسے مار رہا ہے ابہر…

  • Ju hay pas e dewaar udas urdu shayari

    نوشتہ دیوار پڑھیئے جو ہے پس دیوار پڑھیئے کون کس کا راستہ روک سکا ہے آج تک ہو سکے تو تاریخ کے ادوار پڑھیئے خاک چھانتے گزری ہو اک عمر جنکی انکے چہروں پرہی لکھا ہےآدم بیزار پڑھیئے انکی خواہش رہی کہ پا لیں چہرے سے راز دل ارےمیرے لفظوں میں درج ہے میرا احوال…

  • Main youn tau houn yaheen kaheen

    میں یوں تو ہوں یہیں کہیںسچ کہوں تو ہوں کہیں نہیںمیرا پتا بتاتے ہیں وہ لوگجنہوں نے دیکھا مجھے کہیں نہیںمیرے ملال مجھے جینے نہ دیںمر سکوں نہ میں اس ملال میںمیری قدر تو میں خود نہ جان سکامیری وقعت بھی اب کہیں نہیںمیرے شور و شر سے بے زار تھےمیرے اپنے مجھ سے بد…

  • Behak janay ka nuskha day humain koi

    behak janay ka nuskha day humain koi…peenay ko peeyay hain hum ne jaam boht… khaloos ki keemat lagatay hain humare woh…khud unki tau tawajo k bhi hain daaam boht… asar se intezaar kertay rehay thay jis mehman ka…aaj nahi aya kehta hay ho gae hay shaam boht… seeta ki matti ka kasoor tha jo lipat…

  • Ab thori woh zamanay hain k kahai wohi chahye

    اب تھوڑی وہ زمانے ہیں کہ کہیں وہی چاہیئے۔۔ہمیں اس دنیا سےکچھ بھی اب نہیں چاہیئے۔۔ دو چار خواہشوں کی ہماری چھوٹی سی فہرست تھیپرزندگی سے وہی ملا جس پہ کہا اب نہیںچاہیئے۔۔ واعظ نے گزاری ہے زندگی بلک بلک کر مانگتے جسے۔۔  اسی جنت نے ٹھکرایا زاہد تو بہت ہیں یہ اب نہیںچاہیئے۔۔ کہتے…

  • Kesay main apni zaat ki islaah kia karoun

    Kesay main Apni zaat ki islaah kiya keroun…Yehan tau sharafat k roz paimanay badaltay hain…کیسے میں اپنی ذات کی اصلاح کیا کروںیہاں تو شرافت کے روز پیمانے بدلتے ہیں۔ Jhukatay tau hain sir sajday main hum ay khuda…Roz sajda kerny k apne bahanay badaltay hain…جھکاتے تو ہیں سر سجدے میں ہم اے خداروز سجدہ کرنے…