صاف نہ کہئے دل کی بات 

آپ ہمارے ! جھوٹی بات

دکھ دینا نہیں فخر کی بات 

کہہ  نہ سکے اتنی سی بات 

اپنے پرائے سارے خفا ہیں 

بھولے سے کہہ دی سچی بات 

جھوٹ کہا  کہنے والے نے 

آپ اور اتنی اوچھی بات 

ہم اور آپ کے جور کا چرچہ 

یونہی بات سے نکلی بات 

جی نہ سکے تو مر ہی رہیں گے 

عشق سے توبہ جھوٹی بات 

چھپ رہے تو دل جلتا ہے 

اور جو کہہ کر کھوئی بات 

ہم اور آپ کی دل آزاری 

کہہ گئے لب پر آتی  بات 

ہائے وہ لہجے کی شیرینی 

اپنی جیسی پیاری بات 

کون خوشی سے دل دیتا ہے 

ہوگئی ہونے والی بات 

آس کے دیپک رات کے تارے 

سوز مسلسل آج کی بات 

ہاں تمہیں میرے درد سے نسبت 

جاؤ ، سدھارو ، اچھی بات  

از قلم زوار حیدر شمیم

By Syeda Vaiza Zaidi

Vaiza Zaidi is a female writer who writes Urdu web novels online. She is one of the most popular and prolific writers in the Urdu literature scene. She has written over 50 novels in different genres, such as romance, thriller, comedy, and social issues. She has a large fan following who admire her for her creativity, style, and humor. She is also an active blogger who shares her views on various topics related to Urdu culture, literature, and society. She is an inspiring role model for many young and aspiring Urdu writers.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *