حور غم خواری کا جنت دل بہل جانے کا نام

خلد تخیل خرد منداں ہے میے خانے کا نام

ساقیا میے ، رقص اے رندو ترنم مطربو

محتسب کے لب پہ آج آیا ہے پیمانے کا نام

فتنہ ہائے ہوش کا ردعمل دیوانہ پن 

مفت میں بدنام کر رکھا ہے دیوانے کا نام

پھر شگوفے  پھوٹ نکلے ٹوٹ کر آئیی بہار

پھر لیا ہے آپ نے اپنے دیوانے کا نام 

مجھ پہ گزرا ہے کچھ  ایسا عالم تشنہ لبی 

چبھ سا جاتا ہے مرے ہونٹوں میں پیمانے کا نام

میے پیام امن میخانہ بنا دارالسلام 

محتسب کے نام پر رکھا ہے میخانے کا نام

چاک دامان خیر سے چاک جگر سے آملا

یوں  بہارستان ٹھہرا مرے ویرا نے کا نام

داغہائے سینہ پھر لو دے اٹھے ہیں شمیم 

شاعری ٹھہرا جگر کی آگ بھڑکانے کا نام 

از قلم زوار حیدر شمیم

By Syeda Vaiza Zaidi

Vaiza Zaidi is a female writer who writes Urdu web novels online. She is one of the most popular and prolific writers in the Urdu literature scene. She has written over 50 novels in different genres, such as romance, thriller, comedy, and social issues. She has a large fan following who admire her for her creativity, style, and humor. She is also an active blogger who shares her views on various topics related to Urdu culture, literature, and society. She is an inspiring role model for many young and aspiring Urdu writers.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *